ایک چُپ

By Ataullah Kadak

آئی جب عوام کی بات، اُٹھے بہت سوالات
تو کہتے ہیں تم چُپ رہو

نقطہ نشیں ہوئے جب حکمرانوں کے خیالات
پھر ایک چُپ، تم چُپ رہو

لڑ پڑے جب عزتِ نفس کے خاطر ہم ملازم
پوچھتے ہیں تم کون ہو؟ تم چُپ رہو

نارے لگاۓ پھرتے ہیں، سوچ بدلو دیش بدلو
کرو جب نئ سوچ کی بات، تم چُپ رہو

چلو آج ٹھان لیں اور بیاں کریں اپنے جذبات
ایک چُپ انکے لئے جو کہتے ہیں تم چُپ رہو

Ataullah Kadak, an avid reader and writer, finds solace in words. He tries to pen down the emotions which can’t be expressed by tongue. He is fond of Urdu and also writes in English and Hindi. 
Instagram handle : ataullah_kadak4996

ظالِمانَہ اِنْسانِیَت

By Ataullah Kadak

سوکھی شاخوں پر پرِندے نہیں بیٹھا کرتے
جہاں دیکھو وہاں بس درِندے ہی ہیں نظر آتے

بنجر زمین پر اب کوئی گھانس تک نہیں اُگتی
بس معصوموں کی چیخیں کانوں میں ہیں چُبھتی

در در بھٹکتے ہیں بس مارے پھرتے
مُحبّت کے سائے اب کہیں نہیں دِکھتے

پانی مانگو تو زہر پیالوں میں ہیں بھرتے
یہاں اپنے کم اپنوں میں سانپ زیادہ بستے

یہاں کوئی محفوظ نہیں جان لے اے عطا
خود مخلوق یہاں خدا کے داوے ہیں کرتے

Ataullah Kadak, an avid reader and writer, finds solace in words. He tries to pen down the emotions which can’t be expressed by tongue. He is fond of Urdu and also writes in English and Hindi. 
Instagram handle : ataullah_kadak4996

Winners Announced !

On the first of February we gave you an image as the starting point and you sent us beautiful begettings of your imagination. Of all the sent entries we selected three winners, one from each language — English, Urdu and Hindi.

Click on each to read –

To not miss the coming month’s picture, plus the daily posts, subscribe to our mailing list.